سب دوستوں سے اپیل ہے کے اردو فنڈا کو چلانے کے لیے ہمارا ساتھ دیں سب دوست اور اردو فنڈا کے چاہنے والے بڑھ چڑھ کر ڈونیشن دیں. آپ ایزی پیسہ اور پے پال سے پیسے بھیج سکتے ہیں
Contact
[email protected]

اردو فنڈا کے بہترین سلسلے اور ہائی کلاس کہانیاں پڑھنے کے لئے ابھی پریمیم ممبرشپ حاصل کریں . نیا سلسلہ بستی بستی گاتا جائے بنجارا ایڈمن کے قلم سے

Page 36 of 42 FirstFirst ... 26323334353637383940 ... LastLast
Results 351 to 360 of 419

Thread: گوری میم صاحب

  1. #351
    Join Date
    Dec 2008
    Posts
    1,273
    Thanks Thanks Given 
    226
    Thanks Thanks Received 
    1,325
    Thanked in
    177 Posts
    Rep Power
    276

    Default


    اس کے بعد باجی اور میں خوب اچھی طرح نہائے ۔ نہانے کے بعد وہ مجھ سے بڑے ہی خوش گوار موڈ میں کہنے لگیں۔۔ مہاراج آپ سے پراتھنا ہے کہ آپ گھر سے باہر نکل جایئے۔۔۔اور کچھ دیر بعد آ کر اسی ذور سے ہماری بیل بجایئے کہ جس زروں سے آپ نے ابھی ہماری چوت بجائی تھی۔۔۔۔۔۔تو میں ان سے بولا اس سے کیا ہو گا ؟ تو وہ ہنس کر کہنے لگیں ارے بدھو بھائی اس سے یہ ہو گا کہ نیچے سوئی میری چھوٹی نند کے سامنے یہ تاثر جائے گا کہ مہاراج ابھی ابھی پدھارے ہیں ۔۔ جس سے میری چنری اور کردار میں کوئی داغ نہ لاگے گا۔۔۔۔اور تیرا میرا بھائی بہن والا رشتہ مزید تقدس پکڑے گا۔۔۔۔تو میں باجی سے بولا ۔۔ اس کے لیئے آپ کو اتنی شدھ ہندی بولنے کی کیا ضرورت تھی؟۔۔۔ صاف اردو میں کہتے آپ کو کیا موت پڑتی تھی؟ ۔تو وہ میرے ساتھ چمٹتے ہوئے بولیں۔۔۔تم نہیں سمجھو گے بچہ۔۔۔۔۔ یہ سب کمال ہے تمہاری دی ہوئی اس تسکین کا ہے۔۔۔۔۔ کہ جس کی وجہ سے مجھے ایسی باتیں سوجھ رہیں ہیں۔




    چنانچہ نہانے کے فوراً بعد۔۔۔ میں ان کے گھر سے باہر نکلا۔۔۔۔۔۔۔ اور ایک چکر مارکیٹ کا لگا کر واپس ان کے گھر کی طرف آ گیا۔۔۔۔وہاں پہنچ کر جیسے ہی میں نے جونہی بیل بجائی تو پہلی ہی گھنٹی پر باجی ( گیٹ پر) نمودار ہو گئیں۔۔انہیں دیکھ کر میں آہستہ سے بولا۔۔۔ آپ نے تو تیسری یا چوتھی گھنٹی پر آنا تھا تو وہ کہنے لگیں اس کی ضرورت نہیں پیش آئی۔۔۔۔کیونکہ وہ پہلے ہی اُٹھی ہوئی تھی۔ اس کے ساتھ ہی وہ مجھے لے کر میں ثانیہ کے کمرے میں آ گئیں۔۔۔ دیکھا تو ثانیہ بستر پر ٹیک لگا کر بیٹھی ہو ئی تھی۔۔۔ چنانچہ میں جیسے ہی ثانیہ کے سامنے کرسی پر بیٹھا باجی یہ کہتے ہوئے اُٹھ کر چلی گئی۔۔۔۔۔۔ کہ بھائی تم ثانیہ کے پاس بیٹھو میں تمہارے لیئے کچھ پینے کو لاتی ہوں۔۔تو اس پر میں ترنت ہی کہنے لگا کہ باجی جی پانی وانی سے کام نہیں چلے گا بلکہ اس پاپی پیٹ کا کچھ کریں کہ جس میں اس وقت جہازی سائیز کے چوہے دوڑ رہے ہیں میری بات سن کر وہ ہنستے ہوئے بولیں۔۔اتنی گرمی میں آئے ہو۔۔۔ اس لیئے۔۔۔۔ پہلے کچھ ڈرنک وغیرہ پی لو پھر میں تمہارے لیئے کھانے کا کچھ کرتی ہوں ۔۔اتنا کہہ کر وہ کمرے سے باہر نکل گئی جیسے ہی باجی کمرے سے باہر نکلی تو میں نے ثانیہ کی طرف دیکھا اور پھر اس کی طرف اشارہ کرتے ہوئے یہ شعر پڑھا ۔۔۔ کچھ تو نازک مزاج تھے ہم بھی۔۔۔اور کچھ چوٹ بھی نئی ہے ابھی۔۔۔ میرا شعر سننے کے بعد وہ ہنستے ہوئے بولی ۔۔۔اب تو ٹھیک ہوں یار۔۔۔۔البتہ رات طبیعت بہت خراب تھی۔۔۔تو میں اس سے بولا یہ تو بتاؤ کہ ہو ا کیا تھا ؟۔۔۔تو وہ میری طرف دیکھتے ہوئے شرمیلی سی مسکراہٹ سے بولی۔۔۔ یار وہ سالی گوری بڑی ہی اذیت پسند واقع ہوئی تھی۔۔۔اس پر میں اس سے بولا۔۔ زرا تفصیل سے بتاؤ کہ ہو ا کیا تھا؟ ۔۔۔ تو وہ کہنے لگی تفصیل کا تو یہ موقعہ نہیں وہ پھر کبھی سناؤں گی فی الحال اتنا جان لو ۔۔)پھر تھوڑا پاز لے کر بولی(۔۔اس میں کوئی شک نہیں کہ میرے والی گوری انت کی سیکسی ہونے کے ساتھ ساتھ کچھ زیادہ ہی اذیت پسند یا جنونی واقع ہوئی تھی میں اس سے بولا وہ کیسے؟ میری بات سن کر اس نے ایک نظر دروازے کی طرف دیکھا اور پھر اپنی قمیض و برا اوپر کر کے اپنے بریسٹ دکھائے تو میں نے دیکھا کہ اس کے چھوٹے چھوٹے مموں پر جگہ جگہ چک مارنے ( دانت کاٹےت ) کے نشان بنے ہوئے تھے یہ دیکھ کر میں اس سے بولا بڑی وحشی عورت تھی یار۔۔۔۔ تو وہ کہنے لگی۔۔اصل میں سیکس سے پہلے ۔۔۔اس نے مجھے پلا دی تھی جس کی وجہ سے مجھے اتنا احساس نہیں ہوا۔۔۔۔۔۔ پھر کہنے لگی یہ جو مجھے بخار ہوا ہے اور میں ٹھیک سے چل بھی نہیں سکتی ۔۔۔ تو ا س کی وجہ یہ تھی کہ اس سالی نے تمہارے سے بھی ڈبل موٹا اور لمبا لن۔۔۔۔۔۔۔۔۔جو کہ بلا مبالغہ گدھے کے لن جتنا بڑا ہو گا بڑی ہی بے دردی سے میری گانڈ میں گھسیڑ دیا تھا۔۔۔اور پھر مسلسل دھکے مارتی رہی تھی۔۔ جس کی وجہ سے میری گانڈ کا ستایا ناس ہو گیا تھا ۔۔۔۔اس کے ساتھ ہی میں نے ایک نظر دروازے کی طرف دیکھا ۔۔اور اس سے گانڈ دکھانے کی فرمائیش کی۔۔۔۔ میری بات سن کر وہ جھٹ سے اوندھی ہو گئی اور میں نے بڑی احتیاط سے اس کی گانڈ چیک کی تو یہ دیکھ کر حیران رہ گیا کہ اس کی گانڈ جگہ جگہ سے چیری ہوئی تھی۔۔ جسٹ فار چیک جیسے ہی میں نے اس کی موری پر ہاتھ رکھا تو وہ ہلکا سا چیخ کر بولی۔۔۔۔ نہ کرو پلیز مجھے درد ہوتا ہے۔۔۔۔ چنانچہ اس کی گانڈ کا معائینہ کرنے کے بعد میں سیدھا ہو کر بیٹھ گیا۔۔۔اور ہم ادھر ادھر کی باتیں کرنے لگے کچھ دیر بعد باجی کمرے میں داخل ہو کر بولی کھانا ڈائیننگ ٹیبل پر رکھوں ؟ تو میں ان سے بولا۔۔۔ڈائینگ ٹیبل کو چھوڑ و ادھر ہی لے آؤ۔۔۔ چنانچہ وہ ثانیہ کے کمرے میں ہی کھانا لے آئی جو میں نے ڈٹ کر کھایا۔۔۔۔اور پھر کچھ دیر بیٹھ کر واپس گھر آ گیا۔۔
    ندرت مامی کے آنے سے پہلے ہی میں نے ائیر پورٹ پر اپنے دوستوں اور سئینرز سے کہہ کہلوا کر ان کے پروٹوکول کا زبردست بندوبست کروا لیا تھا ۔۔






    چنانچہ جیسے ہی ان کی فلائیٹ نے ائیر پورٹ پر لینڈ کیا۔۔۔ تو ایک اہلکار اپنے ہاتھ ان کے نام کا کتبہ پکڑا ہوا وہاں کھڑا تھا ۔۔۔جیسے ہی مامی نے اس کے ساتھ اپنا تعارف کرایا تو ا س نے الہ دین کے جن کی طرح جھٹ سے ان کا امیگریشن اور کسٹمز وغیرہ کرو ا کر ۔۔ ان کا اٹیچی وغیرہ لے کر باہر آ گیا جہاں میں باجی اور ثانیہ کے ساتھ کھڑا تھا۔۔ جیسے ہی وہ باہر آئیں تو میں انہیں لے اچھی سی کافی پلائی۔۔۔اتنی دیر میں وہ میرے کام سے بہت امپریس ہو چکی تھیں چنانچہ جیسے ہی باجی نے ان سے میرا تعارف کروایا تو وہ مجھ سے ہاتھ ملاتے ہوئے کہنے لگیں۔۔۔ پتہ نہیں کیا بات ہے کہ اسٹیٹس میں عدیل نے تمہارے بارے میں ایک لفظ بھی نہیں کہا لیکن پچھلے کچھ عرصے سے ہماری فیملی میں جو تمہاری دھوم مچی ہے تو آئی تھنک درست ہی مچی ہے پھر ٹیکسی پر بیٹھنے لگی تو میں صائمہ باجی سے مخاطب ہو کر بولا۔۔۔ باجی جی میں نے ٹیکسی کا کرایہ ادا کر دیا ہے اور اس سے قبل کہ مامی کچھ کہتیں ۔۔۔ میں نے ان کو بائے بائے کر دیا۔۔۔



    مامی سے وغیرہ سے فارغ ہو کر میں گھر آ گیا۔۔۔اور عدیل کو فون کر کے ساری صورتِ حال سے آگاہ کر دیا تو وہ کہنے لگا کیا بات ہے یار مامی بھی تیری فین ہو گئی ہے تو میں اس کو جواب دیتے ہوئے بولا۔۔۔فین تو ہونا ہی تھا یار۔۔۔۔۔۔ ان کو اتنا زبردست پروٹوکول جو دلایا تھا۔۔۔تو وہ میری ہاں میں ہاں ملاتے ہوئے کہنے لگا۔۔۔۔۔ یہ بھی درست ہے۔۔۔۔ پھر باتوں باتوں میں اس نے مجھے بتایا کہ رمشا کی والدہ اور جمال صاحب بھی لاہور پہنچ گئے ہیں۔۔۔ عدیل کے منہ سے یہ سن کر کہ رمشا کی والدہ اور اس کا بھائی تعزیت کے لیئے لاہور گئے ہیں ۔۔ میرا لن خوشی سے جھوم اُٹھا اور ببانگِ دھل میرے کان میں بولا۔۔۔ استاد جی اس کا مطلب یہ ہوا کہ اس وقت حسینہ گھر میں اکیلی ہو گی۔ میرے دماغ میں اتنی بات آنے کی دیر تھی کہ مجھے ایک نشہ سا ہونے لگا۔۔۔اور میرے لیئے مزید گھر میں رکنا مشکل ہو گیا تھا اس لیئے۔۔۔۔ میں گھر سے باہر نکلا اور ٹیکسی میں بیٹھ کر اسے پتہ سمجھا دیا ۔۔ میں رمشا کے گھر جا رہا تھا ۔۔وہی خوب صورت حسینہ جو دیتی کم اور ترساتی زیاہ تھی۔۔۔ اس میں کوئی شک نہیں کہ رمشا بہت سمارٹ اور سیکسی لڑکی تھی لیکن وہ اسی قدر تیز بھی تھی۔۔۔ اسی لیئے آج تک اس نے مجھے پھدی نہیں دی تھی۔۔۔۔ بلکہ ترسایا ہی ترسایا تھا۔۔۔ اور اب جبکہ مجھے معلوم ہوا تھا کہ وہ گھر پر اکیلی ہے تو خود بخود ہی میری رالیں ٹپکنا شروع ہو گئیں تھیں۔۔۔ میرا خیال تھا کہ میں جاتے ہی بنا کوئی بات کیئے۔۔۔۔۔پہلا کام یہی کروں گا کہ اسے چودں گا۔۔اس لیئے میں نے ٹیکسی سے اتر کر اس کی بیل بجائی ۔۔۔۔۔۔۔تو جواب میں اسی نے دروازہ کھولا۔۔۔ مجھے دیکھتے ہی اس کی آنکھوں میں ایک شرارت سی ناچ گئی۔۔۔اور وہ مجھ سے کہنے لگی گوروں نے سچ ہی کہا تھا۔۔۔ کہ تھنک اباؤٹ شاہ جی ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔اور شاہ جی از دئیر۔۔۔۔۔اس کے ساتھ ہی اس نے مجھے اندر آنے کا اشارہ کیا۔۔۔۔ گھر میں داخل ہوتے ہی میں نے اسے گلے سے لگانا چاہا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔تو وہ پرے ہٹتے ہوئے بولی ۔۔ارے ارے کیا کر رہے ہو؟ تو میں بڑی بے تکلفی سے بولا۔۔۔تم سے پیار کا اظہار کر نے لگا ہوں تو وہ پیچھے ہٹتے ہوئے بولی۔۔۔ لیکن یہ پیار کی جگہ نہیں ہے تو میں اس سے بولا۔۔۔گولی دینے کی کوشش نہ کر۔۔۔ مجھے معلوم ہے کہ آنٹی اور جمال بھائی لاہور گئے ہوئے ہیں۔۔۔۔




    اس کے ساتھ ہی میں اسے پکڑ کر اپنے ساتھ لگانے ہی والا تھا کہ اندر سے ایک سریلی سی آواز سنائی دی۔۔۔ رمشا باہر کون تھا؟ وہ آواز سن کر مجھے ایسا لگا کہ جیسے کسی نے میرے سر پر بمب پھوڑ دیا ہو.. ۔۔ میں نے سر اُٹھا کر آواز کی سمت دیکھا تو میرے سامنے ایک بہت ہی پرکشش سی لڑکی کھڑی تھی اسے دیکھ کر میں چند سیکنڈز کے لیئے سٹل ہو گیا... دوسری طرف وہ لڑکی بھی بڑی دل چسپ نظروں سے میری طرف دیکھ رہی تھی۔۔۔پھر وہ رمشا کی طرف دیکھتے ہوئے بولی میرے بیسٹ نالج کے مطابق ان حضرت کا نام شاہ ہونا چایئے ۔۔اس پر کشش لڑکی کے منہ سے اپنا نام سن کر میں حیران رہ گیا۔۔۔ جبکہ دوسری طرف رمشا جلدی سے بولی یس ڈئیر! تم نے ٹھیک پہچانا یہ میرا بیسٹ فرینڈ شاہ جی ہے اور پھر میری طرف دیکھتے ہوئے رمشا بولی اور ڈئیر شاہ صاحب یہ میری فسٹ کزن اور بیسٹ آف دی بیسٹ فرنیڈ انوشہ ذوالفقار ہے باقی اس کے بارے میں کافی جان کاری تم رکھتے ہو ۔رمشا کی بات سن کر انوشہ بڑی ادا سے کہنے لگی اوئے بی بی تم نے اپنے فرینڈ کو میرے بارے کیا بتا دیا؟ تو رمشا مسکراتے ہوئے بولی ۔۔۔۔ چپ کر ۔۔۔ جو بھی بتایا ہے درست بتایا ہے۔ اس کے بعد رمشا نے مجھے اندر چلنے کا اشارہ کیا۔۔ اور میرے پوچھنے پر اس نے بتلایا کہ انوشہ آج صبع ہی فیصل آباد سے پنڈی آئی ہے وجہ نزول یہ بتائی کہ ایک دوست کی شادی پر آئی ہے اس کے بعد رمشا مجھ سے کہنے لگی آج رات ہم نے شادی پر جانا ہے تم بھی ساتھ چلو تو مزہ آئے گا۔۔ تو میں اس سے بولا بھلا میں کہاں جاؤں گا؟ نا جان نہ پہچان تے میں تیرا مہمان۔تو اس پر رمشا کہنے لگی میری کون سی جان پہچان ہے میں بھی تو جا رہی ہو ں نا ۔اس لیئے تم بھی چلو۔۔۔ ۔ ابھی ہم یہی باتیں کر رہے تھے کہ اوپر سے انوشہ آ گئی۔۔۔ اور قبل اس کے کہ رمشا کچھ کہتی وہ کہنے لگی شاہ جی آج رات اسلام آباد کی ایک مارکی میں شادی ہے اگر آپ بھی ساتھ چلو گے تو رونق دوبالا ہو جائے گی۔۔۔ اس پر میں نے ہچر میچر کرنے کی بڑی کوشش کی لیکن ان لڑکیوں نے میری ایک نہ سنی۔۔آخر چار و ناچار مجھے ہاں کرنا پڑی ۔۔بارات کا وقت رات آٹھ بجے تھے لیکن لڑکیاں مجھ سے بولیں۔۔آپ ساڑھے آٹھ بجے تک آ جانا۔۔۔ ساتھ ہی رمشا کہنے لگی اگر ہو سکے تو ساتھ کسی دوست کی گاڑی لیتے آنا کہ وہاں سے مارکی (شادی حال) کافی دور تھا۔

    v
    Last edited by Story Maker; 05-01-2019 at 10:55 AM.

  2. The Following 11 Users Say Thank You to shahg For This Useful Post:

    abba (08-01-2019), abkhan_70 (05-01-2019), farhan403 (05-01-2019), Fathr Of Fun (05-01-2019), hot-boy (06-01-2019), hot_irfan (06-01-2019), Lovelymale (05-01-2019), MamonaKhan (05-01-2019), Mirza09518 (06-01-2019), piyaamoon (05-01-2019), windstorm (05-01-2019)

  3. #352
    Join Date
    Dec 2008
    Posts
    1,273
    Thanks Thanks Given 
    226
    Thanks Thanks Received 
    1,325
    Thanked in
    177 Posts
    Rep Power
    276

    Default

    [COLOR="#A9A9A9"]

    واپس جا کر اپنے ایک دوست سے گاڑی مانگی ۔۔۔ اور تیار شیار ہو کر رات آٹھ بجے میں رمشا کے گھر پہنچ گیا گھنٹی کے جواب میں انوشہ نے ہی دروازہ کھولا تھا۔۔۔ مجھے دیکھتے ہی اس نے بڑی ہی گہری نظروں سے میرا جائزہ لیا اور پھر کہنے لگی اندر آ جاؤ۔۔۔ میں اس کے ساتھ چلتا ہوا سیدھا رمشا کے کمرے میں پہنچ گیا ۔۔ اندر پہنچ کر معلوم ہو ا کہ رمشا تو ابھی نہا رہی تھی جبکہ انوشہ تیاری کر رہی تھی موقع کی مناسبت سے انوشہ نے بڑا ہی سندر۔۔۔اور کام والا سوٹ پہنا ہوا تھا۔۔۔۔جس میں وہ بڑی ہی سیکسی لگ رہی تھی ڈریسنگ کے سامنے بیٹھتے ہوئے وہ کہنے لگی۔۔ تمہاری اور رمشا کی دوستی کب سے ہے تو میں اس سے بولا زیادہ نہیں دو ڈھائی ماہ ہوئے ہیں تو اس پر وہ ایکٹنگ کرتے ہوئے بولی۔۔۔۔ اُف اتنی پرانی دوستی اور ابھی تک کیا کچھ نہیں؟ رمشا کے منہ سے اتنی بے باک بات سن کر میں نے بڑی حیرانی سے اس کی طرف دیکھا تو وہ ڈریسنگ مرمر سے ہی مجھے آنکھ مارتے ہوئے بولی گھبرا نہیں دوست میں زرا وکھری ٹائپ کی لڑکی ہوں۔ اتنی دیر میں رمشا بھی بدن پر ٹاول لپیٹے کمرے میں داخل ہوئی اور مجھے دیکھ کر بولی تم کب آئے؟ تو میں اس سے بولا ۔۔ابھی کچھ ہی دیر ہوئی ہے اس سے پہلے کہ رمشا کچھ جواب دیتی ۔۔۔ انوشہ آگے بڑھی اور رمشا کے بدن سے ٹاول ہٹا دیا۔۔۔اب میری نظروں کے سامنے رمشا بلکل ننگی کھڑی تھی۔ میں رمشا کے جسم کے نشیب وفراز ۔۔۔۔۔اور اس کے نمایاں خطوط بڑی گہری نطروں سے دیکھ رہا تھا کہ انوشہ نے جلدی سے ٹاول رمشا کے اوپر ڈال دیا ۔۔۔اور مجھے سناتے ہوئے بظاہر رمشا سے کہنے لگی۔۔۔۔ توبہ توبہ ۔۔اگر میں دو منٹ اور تم کو ننگا رکھتی تو اس بھائی ( میری طرف اشارہ کرتے ہوئے) کی موت یقینی تھی۔تو اس پر میں اس کی بات پر گرہ لگاتے ہوئے بولا۔۔۔




    اور موت کی وجہ یہ لکھی ہونی تھی کہ اس نے ایک پری کو ننگا دیکھ لیا تھا۔۔میری بات سن کر انوشہ نے ایک دم گھوم کر میری طرف دیکھا اور کہنے لگی تم نے میری بات کا مائینڈ تو نہیں کیا؟ تو میں اس سے بولا۔۔۔ مس جی مائینڈ کس بات کا ۔۔۔میں بھی زرا وکھری ٹائپ کا بندہ ہوں۔ اس طرح کی ہنسی مزاق میں وہ لڑکیاں بمشکل تیار ہوئیں۔راستے میں رمشا مجھ سے کہنے لگی تمہیں معلوم ہے شاہ کہ کسی زمانے میں ۔۔۔ میں پکی لیسبو تھی اور مجھے اس طرف لانے والی یہ محترمہ ہے تو میں گاڑی ڈرائیونگ کرتے ہوئے بولا۔۔۔ ہاں یار تم نے مجھے بتایا تھا تو اس پر رمشا کہنے لگی۔۔۔ ویسے آپس کی بات ہے انوشہ تم سے کافی متاثر ہوئی ہے۔۔ اس پر میں نے گاڑی کے بیک مرر سے انوشہ کی طرف دیکھا اور اس سے بولا ۔۔۔ کیا واقعی آپ مجھ سے متاثر ہوئی ہیں؟ تو وہ بڑی ادا سے کہنے لگی ۔۔۔۔ ابھی تک تو میں نے صرف باتیں ہی باتیں سنی ہیں دیکھا تو کچھ بھی نہیں ۔۔۔تو میں اس سے بولا ۔۔ جہاں تک دیکھنے کا تعلق ہے تو آپ حکم کریں آپ کو ابھی وہ سب دکھا سکتا ہوں جس کی ایک لڑکی صرف تمنا کر سکتی ہے۔۔ تو آگے سے انوشہ کہنے لگی مسڑ شاہ دو چار لونڈیوں سے" حساب کتا ب "کر کے بعض لوگ خود کو ویسے ہی ماسٹر سمجھ لیتے ہیں تو میں اس سے کہنے لگا ۔۔ میں نے اپنے ماسٹر ہونے کا ابھی تک دعوٰی نہیں کیا۔۔۔تو وہ کہنے لگی آپ نے نہیں کیا نا۔۔۔ آپ کی گرل فرنیڈ نے تو اس بات کا رولا ڈالا ہو ا ہے۔۔۔اس پر میں نے رمشا کی طرف دیکھا تو وہ دانت نکالتے ہوئے کہنے لگی ۔۔۔ یار میں نے توفقط تمہاری عزت بڑھائی تھی۔۔۔۔۔ کچھ برا تو نہیں کیا۔۔۔۔اسی طرح کی باتیں کرتے ہوئے ہم لوگ مطلوبہ شادی حال پہنچ گئے جہاں پر سٹینگ اریجمنٹ ایسا تھا کہ آپ فیملی کےساتھ بیٹھ سکتے تھے سو ایک ٹیبل پر میں رمشا اور انوشہ بیٹھ گئے ۔اپنے آس پاس اتنی ساری خوب صورت لیڈیز کو بیٹھا دیکھ کر رمشا نے انوشہ کی طرف دیکھا اور شرارت بھرے انداز میں کہنے لگی ۔۔۔۔انوشے اتنی کیوٹ خواتین کو ایک ساتھ دیکھ کر مجھے کچھ کچھ ہو رہا ہے تو اس پر انوشہ اسے دلاسہ دیتے ہوئے کہنے لگی۔۔۔ تھوڑا صبر کر لو میری جان گھر جا کر میں تیرے سارے ارمان پورے کر دوں گی۔۔ ان کی باتیں سن کر میں بھی دخل در معقولات دیتے ہوئے بولا۔۔۔ لیڈیز اس بات کا دھیان رہے کہ اس کھیل میں میں بھی برابر کا شریک ہوں گا۔۔۔۔تو اس پر رمشا کہنے لگی۔۔۔ تم شریک ضرور ہو گئے لیکن جب ہم چاہیں گی تب تم رنگ میں داخل ہو گئے۔۔۔ہمیں وہاں بیٹھے کافی دیر ہو گئی تھی کہ اتنے میں انوشہ کی دو تین دوست بھی بھی وہاں پر آ گئیں اور مزے کی بات یہ ہے کہ انوشہ نے میرا اور رمشا کا تعارف بطور میاں بیوی کے کرایا جسے میرے ساتھ ساتھ رمشا نے بھی خوب انجوائے کیا۔۔ہمیں انجوائے کرتا دیکھ کر وہ بھی مسکرا دی۔۔








    شادی سے واپسی پر رمشا گاڑی چلا رہی تھی جبکہ آگے والی سیٹ پر انوشہ اور گاڑی کی پچھلی سیٹ پر میں بیٹھا ہوا تھا ۔۔۔گاڑی چلاتے ہوئے رمشا مجھ سے کہنے لگی یہ بتاؤ کہ تم نے گاڑی کب واپس کرنی ہے؟ تو میں اس سے بولا۔۔۔ گاڑی کی کوئی ٹنشنئ نہیں ۔۔ کل واپس کر دوں گا تو اس پر وہ اٹھلاتے ہوئے بولی ۔۔اس کا مطلب آج رات تم ہمارے ساتھ سٹے کر رہے ہو تو میں انوشہ کی طرف دیکھتے ہوئے بولا ۔۔۔ ہا ں یار زرا میں بھی تو دیکھو ں کہ تمہاری کزن کتنے پانی میں ہے۔۔تو اس پر انوشہ ترنت جواب دیتے ہوئے بولی۔۔۔ پانی کا تو پانی نکلنے کے بعد ہی پتہ چلے گا۔اس کے ساتھ ہی اس نے بڑی ہی بے تکلفی سے رمشا کی دونوں ٹانگوں کے بیچ میں ہاتھ پھیرا ۔۔۔۔۔اور کہنے لگی۔۔۔ میری جان تمہاری ان دو ٹانگوں کے بیچ سکون و لزت ۔۔۔کی کیا ہی مدہوش کر دینے والی نہر ہے۔۔ جس کا پانی آج تک نہیں سوکھا ہے۔۔۔تو اس پر رمشا بھی انوشہ کی پھدی پر ہاتھ پھیرتے ہوئے بولی۔۔۔ بڑے دنوں کے بعد اس شیرنی کی سواری نصیب ہو گی۔۔اس کے ساتھ اس نے اپنی لمبی سی زبان باہرنکالی اس کے ساتھ ہی انوشہ اور رمشا کی زبانیں آپس میں ٹکرانا شروع ہو گئیں۔۔۔۔وہ بار بار ایک دوسرے کے ساتھ اپنی زبانیں ملا رہیں تھیں۔۔۔اسی اثنا میں بھی سیٹ سے کھسک کر آگے ہوا۔۔۔۔۔اور انوشہ کا سر پکڑ کر اپنی طرف کیا ۔۔۔۔تو میں نے دیکھا کہ اس کی آنکھوں شہوت سے چور ہو رہی تھیں۔۔۔اس نے ایک نظر میری طرف دیکھا اور کہنے لگی ۔۔۔ کیا ہے؟ تو میں اپنی زبان باہر نکال کر اس کے منہ کی طرف لہراتے ہوئے بولا۔۔۔۔۔ ایک نظر ادھر بھی میری جان کہ مجھ کو بھی اتنا ہی سیکس چڑھا ہوا ہے جتنا کہ تم دونوں کو چڑھا ہے۔۔۔۔ میری با ت سن کر انوشہ نے اپنی زبان باہر نکالی اور میری زبان کے آس پا لہراتے ہوئے بولی۔۔۔۔اگر میں تم کو اپنی زبان کا مزہ نہ دوں تو؟ اس کی بات سن کر میں نے اسے بالوں سے پکڑا۔۔۔۔اور زبردستی اس کے منہ میں اپنا منہ ڈال دیا۔۔۔





    کچھ دیر تک اس نے اپنے منہ کو بند رکھا ۔۔۔۔لیکن جب میں نے پیہم اس کے ہونٹوں پر زبان پھیرنی شروع کی تو کچھ دیر بعد اس نے اپنے منہ کو کھول دیا۔۔۔۔ جس کی وجہ سے میری زبان تیر کی طرح اس کے منہ میں گھس گئی۔۔۔۔۔اور بجائے اس کے کہ میں اس کی زبان تلاش کرتا اس نے میری زبان تلاش کی اور پھر میری زبان سے ایسی زبان ملائی کہ اگےک دو تین منٹ تک ہم دونوں نے بڑی ہی طویل ٹنگ کسنگ کی۔۔۔پھر جیسے ہی ہمارے منہ ایک دوسرے سے الگ ہوئے تو رمشا ہنستے ہوئے کہنے لگی ۔۔ میرے ہسبینڈ کی" کس" کیسی لگی؟ تو انوشہ کچھ سوچ کر بولی۔۔۔سچ کہوں۔۔۔۔۔۔۔ تو رمشا بولی جی سچ ہی میں پوچھ رہی ہوں تو وہ کہنے لگی اے ون ۔۔۔پھر رمشا کی طرف دیکھتے ہوئے بولی۔۔ جس طرح دیگ کا ایک دانہ چکھنے سے پتہ چل جاتا ہے کہ چاول کیسے پکے ہوں گے ؟اسی تمہارے دوست سے ایک ہی کس میں ۔۔۔۔ میں جان گئی ہوں کہ اسے سیکس کے بارے میں کافی جان کاری ہے تو اس پر رمشا مزہ لیتے ہوئے بولی وہ کیسے؟ رمشا کا سوال سن کر انوشہ نے کچھ دیر سوچا اور پھر۔۔۔۔ کہنے لگی۔۔کسی ٹھرکی بابے نے کیا ٹھیک کہا ہے کہ سیکس ایک آرٹ ہے ، تو اس آرٹ سے تمہارا دوست بخوبی آگاہ لگتا ہے۔۔۔۔ تو اس پر رمشا مست آواز میں کہنے لگی اس ٹھرکی بابا کی اور بھی باتیں بتاؤ نا پلززززز۔۔ تو اس پر انوشہ نے کچھ دیر مزید سوچا اور پھر ٹھہر ٹھیر کر کہنے لگی۔۔۔مہا ٹھرکی بابا کہتا ہے کہ چدائی ایک فن ہے ، ہمبستری ایک کلا ہے ۔۔۔دو منٹ میں دو جھٹکے مار کے للی کو لٹکا کے عورت کو پیاسا چھوڑنا سیکس نہیں قدرت نے سیکس میں مزہ رکھا ہے سیکس کو پڑھو سیکس کو سیکھو اور سیکس کا مزہ لو۔۔۔پھر میری طرف منہ کر کے وہ رمشا سے سے کہنے لگتی مجھے ایسا لگتا ہے کہ تمہارے دوست نے سیکس کو پڑھا بھی ہے اور یہ جانتا ہے کہ سیکس کا مزہ کیسے لینا ہے۔۔۔۔اس قسم کی سیکسی باتیں کرتے ہوئے ہم گھر پہنچ گئے تھے ۔
    [
    /COLOR]
    Last edited by Story Maker; 05-01-2019 at 10:56 AM.

  4. The Following 12 Users Say Thank You to shahg For This Useful Post:

    abba (08-01-2019), abkhan_70 (06-01-2019), farhan403 (05-01-2019), Fathr Of Fun (05-01-2019), hot-boy (06-01-2019), hot_irfan (06-01-2019), Lovelymale (05-01-2019), MamonaKhan (05-01-2019), Mirza09518 (06-01-2019), musarat (09-01-2019), sweetncute55 (05-01-2019), windstorm (05-01-2019)

  5. #353
    Join Date
    Dec 2008
    Posts
    1,273
    Thanks Thanks Given 
    226
    Thanks Thanks Received 
    1,325
    Thanked in
    177 Posts
    Rep Power
    276

    Default


    اس وقت میرے سامنے پلنگ پر رمشا اور انوشہ ننگی لیٹی ہوئیں تھیں۔۔۔ اور رمشا انوشہ کی چھاتیاں چوس رہی تھی اور رمشا کے منہ سے سیکس سے بھر پور آوازیں نکل رہیں تھیں جبکہ پلنگ کے سامنے میں پورے کپڑوں میں ایک سنگل صوفے پر بیٹھا ان دونوں کا سیکس شو دیکھ رہا تھا۔۔جبکہ رمشا کی گول گول اور موٹی گانڈ دیکھ کر میرے دل کو کچھ کچھ ہو رہا تھا۔۔۔۔ لیکن لڑکیوں نے بڑی سختی کے ساتھ مجھے پابند کیا تھا کہ جب تک وہ نہ کہیں میں نے بیڈ پر نہیں آیا۔۔حال یہ تھا کہ پینٹ کے اندر میرا لن اپنی اکڑاہٹ کے آخری درجے تک پہنچا ہوا تھا ۔۔۔۔لیکن میں مجبور تھا۔۔۔۔ یونہی بیٹھے بیٹھے اچانک مجھے خیال آیا اور میں نے جلدی سے اپنے سارے کپڑےاتار پھینکے۔۔۔۔۔۔اب میرا شیش ناگ پھن پھیلائے کھڑا تھا۔۔ لیکن دونوں لڑکیاں اس بات سے بے نیاز ایک دوسرے کے ساتھ اوورل کر رہی تھیں۔۔۔۔ رمشا کی حد تک تو بات درست تھی ۔۔لیکن غضب اس وقت ہوا کہ جب انوشہ رمشا کہ اوپر آئی۔۔۔۔۔۔اُف۔ف۔فف۔ف۔ اس کی گول شیب کی باہر کو نکلی ہوئی گانڈ دیکھ کر پہلے تو میں خاموش رہا ۔۔اور صرف لن کو مسلتا رہا ۔۔۔ لیکن جب اس نے اپنی دونوں ٹانگیں کھول کر رمشا کی چوت چاٹنا شروع کی تو اس کی سیکسی گانڈ ۔۔۔۔۔۔۔اور بھوکی شیرنی جیسے پھدی کی ایک جھلک دیکھ کر میں جمپ مار کر پلنگ پر آ گیا۔۔۔ جیسے ہی میں پلنگ پر پہنچا تو انوشہ نے رمشا کی پھدی چاٹنا بند کر کے میری طرف دیکھنا شروع کر دیا۔۔۔جبکہ اس کے نیچے لیٹی رمشا شور مچاتے ہوئے بولی۔۔۔یہ سراسر چیٹنگ ہے۔۔۔ ہم نے کہا بھی تھا کہ ہماری پرمیشن کے بغیر تم نے اوپر نہیں آنا پھر تم کیسے آ گئے؟ ابھی رمشا رولا ڈال ہی رہی تھی کہ انوشہ کہ جس کی نظریں میرے لن پر گڑھی ہوئیں تھیں۔۔۔ ہاتھ اُٹھا کر بولی..چپ کر کتیا ۔۔۔۔آخرِ کار ہم نے اس سے چدوانا تو تھا نا۔۔ ہمارے کہنے بغیر آگیا تو کون سی قیامت ٹوٹ پڑی۔۔۔۔پھر مجھ سے مخاطب ہو کر بولی۔۔۔ہینڈ سم زرا ادھر تو آ۔۔پھر رمشا سے مخاطب ہو کر بولی۔۔۔




    دیکھ تو سہی اس کی دونوں ٹانگوں کے درمیان لن کیسے شیش ناگ کی طرح تنا کھڑا ہے۔۔۔۔پھر کہنے لگی شاہ جی میں اسے شاہی لوڑا کہوں گی۔۔۔۔۔۔اتنی بات کرتے ہی اس نے ہاتھ بڑھا کر میرے لن کو اپنے ہاتھ میں پکڑ لیا۔۔۔۔۔اور اسے دباتے ہوئے بولی۔۔۔۔کیسا ہارڈ ہے؟پھر ٹوپے پر انگلی پھیرتے ہوئے بولی۔۔۔اس شاہی لوڑے کا کیسا موٹا ٹوپ ہے ۔۔۔۔۔ پھر وہ رمشا کی طرف گھومی اور اس سے کہنے لگی آج شاہی لوڑے ۔۔۔۔اور بھوکی شیرنی کے ملاپ سے چودائی کا مزہ آنے والا ہے ۔۔۔۔اتنی دیر میں رمشا بھی اُٹھ کر گھٹنوں کے بل میرے ساتھ کھڑی تھی۔۔۔تبھی انوشہ اس سے کہنے لگی ۔۔۔۔زرا لن پر تھوک تو پھینک ۔۔۔میں نے اس کی مُٹھ مارنی ہے ۔۔اس کی بات سن کر رمشا بلکل میرے لن پر جھکی اور ایک بڑا سا تھوک کا گولہ پھینک کر بولی۔۔۔مُٹھ نہ مار بلکہ لن کو چوس مزہ آئے گا۔۔۔۔تو انوشہ نے ایک نظر رمشا کی طرف دیکھا اور پھر میرے لن پر جھک گئی۔۔۔جیسے ہی انوشہ نے میرے لن کو چاٹنا شروع کیا ۔۔۔عین اسی وقت رمشا نے مجھے دھکا دے کر بیڈ پر گرا دیا۔۔۔اور پھر گھٹنوں کے بل چلتی ہوئی میرے منہ کی طرف آ گئی اور میرے منہ پر ہلکا سا تھپڑ مارتے ہوئے بولی۔۔۔چل سالے ۔۔۔میری پھدی چاٹ۔۔۔لائف میں پہلی دفعہ یہ ہو رہا تھا کہ ایک حسین لڑکی میرا لن چوس رہی تھی اس کے ہونٹوں کا لمس اور کی منہ کی گرمی ۔۔۔یہ سب مجھے پاگل کر رہی تھیں لیکن دوسری طرف مجھے آرڈر ملا کہ میں پھدی چاٹوں چنانچہ میں نے زبان باہر نکالی اور رمشا کی پھدی چاٹنا شروع ہو گیا۔۔۔۔ اب پوزیشن یہ تھی کہ انوشہ میرا لوڑا چوس رہی تھی جبکہ عین اسی وقت میں رمشا کی پھدی چاٹ رہا تھا۔۔۔ رمشا کی پھدی بہت ہاٹ اور بالوں والی تھی۔۔۔۔اسی لیئے اس سے پھدی کی مہک بہت ہی تیز آ رہی تھی ۔۔کچھ دیر تک ہم ایسے ہی کرتے رہے پھر اچانک ہی رمشا نے میرے سر کو پکڑا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔اور میرے منہ میں ڈسچارج ہونا شروع ہو گئی۔۔۔۔۔



    جیسے ہی وہ ڈسچارج ہوئی تو وہ میرے ساتھ لیٹ کر گہرے گہرے سانس لینے لگی۔۔ یہ دیکھ کر انوشہ نے لن کو منہ سے نکالا۔۔۔اور مجھے اُٹھانے لگی۔۔۔جیسے ہی میں اوپر اُٹھا ۔۔۔۔تو اس نے اپنی ایک چھاتی میرے سامنے کر دی اور کہنے لگی ۔۔۔ میرا دودھ پیو۔۔۔۔ بلاشبہ انوشہ کی چھاتیاں بہت بڑی اور نپلز کافی موٹے تھے جنہیں چوسنے کا بہت مزہ آیا۔۔۔۔ابھی میں نے اس کی ایک چھاتی چوسی تھی کہ اس نے میرے منہ سے اپنی چھاتی کو نکال لیا۔۔۔۔۔۔اور دونوں چھاتیوں کو ہاتھ میں پکڑ کر بولی۔۔۔۔ میری پھدی بعد میں مارنا ۔۔۔پہلے چھاتیاں چود۔۔۔۔پھر مجھ سے کہنے لگی میری چھاتیوں کی دراڑ میں تھوک پھینک اور میں نے اس کی دونوں چھاتیوں کے بیچ میں بننے والے شگاف میں تھوک پھینکا ۔۔۔۔۔تو اس نے جلدی سے میرے لن کو تھوک سے نہلایا ۔۔۔جب کی اسکی چھاتیاں اچھی طرح چکنی ہو گئیں۔۔تو وہ کہنے لگے چل اب میری چھاتیاں چود۔۔ اور اس کے ساتھ ہی اس نے اپنی چھاتیوں کو میرے لن میں رکھا ۔۔۔۔اورانہیں تیز تیز ہلانے لگی۔۔۔ میرے لیئے چھاتیاں چودنے کا یہ پہلا موقع تھا اس لیئے انہیں چودنے کا بڑا مزہ آیا۔۔۔کافی دیر تک وہ مجھ سے اپنی چھاتیاں چدواتی رہی پھر تھوڑی دیر بعد رمشا اوپر اُٹھی اور انوشہ سے کہنے لگی کیا خیال ہے لن لیا جائے؟ تو انوشہ بولی اتنی جلدی؟ اس پر رمشا کہنے لگی۔۔۔ تم نے لن چوس لیا۔۔۔چھاتیاں میں ڈال لیا۔۔۔اب پھدی ہی باقی بچتی ہے کہ جہاں لن لینا باقی ہے ۔۔پھر کہنے لگے ویسے ساری رات پڑی ہے جتنی مرضی لینا۔۔۔ تب انوشہ اس سے کہنے لگی۔۔۔ کس سٹائل میں چدوائیں؟ تو مشا کہنے لگی دونوں گھوڑی بنتی ہیں شاہ باری باری ہم دونوں کی چوت میں اپنے لن کو ان آؤٹ کرے گا۔۔اس کے ساتھ ہی رمشا جلدی سے گھوڑی بن گئی۔۔۔ جبکہ انوشہ گھوڑی بنتے ہوئے کہنے لگی۔۔۔۔تھوڑی سی چاٹنا بھی ہے۔۔۔اور میں نے پہلے تو انوشہ کی بھوکی شیرنی کو اچھی طرح چاٹا پھر۔۔۔۔۔۔ ان کے پیچھے گھٹنوں کے بل کھڑا ہو گیا۔۔۔۔۔اور ایک کی پھدی میں لن ڈالتا ۔۔۔کچھ دیر گھسے مارتا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔تو پھر دوسری کی مارنا شروع ہو جاتا۔۔۔۔۔سو میں ون بائی ون دونوں کی پھدی بجاتا گیا بجاتا گیا۔۔۔۔۔۔۔۔بجاتا گیااا۔ا۔۔۔ا۔ا۔ا۔ا۔ا۔اور بجاتا ہی گیااااااااااااااااااااااااا۔



    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔جاری ہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
    Last edited by Story Maker; 05-01-2019 at 10:55 AM.

  6. The Following 16 Users Say Thank You to shahg For This Useful Post:

    faisalusman (06-01-2019), farhan403 (05-01-2019), Fathr Of Fun (05-01-2019), hot-boy (06-01-2019), hot_irfan (06-01-2019), irfan1397 (05-01-2019), Lovelymale (05-01-2019), MamonaKhan (05-01-2019), mmmali61 (05-01-2019), musarat (09-01-2019), piyaamoon (05-01-2019), Rowdy Girl (07-01-2019), saqi870 (05-01-2019), sweetncute55 (05-01-2019), waqastariqpk (05-01-2019), windstorm (05-01-2019)

  7. #354
    Join Date
    Oct 2018
    Posts
    16
    Thanks Thanks Given 
    35
    Thanks Thanks Received 
    39
    Thanked in
    16 Posts
    Rep Power
    3

    Default

    واہ شاہ جی اپڈیٹ سے مارننگ واقعی گڈ ہو گئی صبح صبح ایسا مزہ بہت ہی کم آتا ہے
    تھوڑا سا لیسبئن کو مزید طول دیتے تو زیادہ مزہ آتا ویسے ابھی بھی اپڈیٹ بہترین ہے۔۔۔۔اب اگلی اپڈیٹ کا انتظار مزید شدید ہے

  8. The Following 4 Users Say Thank You to sweetncute55 For This Useful Post:

    abkhan_70 (06-01-2019), farhan403 (05-01-2019), hot_irfan (06-01-2019), shahg (06-01-2019)

  9. #355
    Join Date
    Nov 2018
    Posts
    1
    Thanks Thanks Given 
    0
    Thanks Thanks Received 
    3
    Thanked in
    1 Post
    Rep Power
    0

    Default

    Kamal likhte ho

    Wah g wah
    Kia bat hy shah gggggggggggg

  10. The Following 3 Users Say Thank You to Janujaan For This Useful Post:

    farhan403 (05-01-2019), hot_irfan (06-01-2019), shahg (06-01-2019)

  11. #356
    Join Date
    Jan 2009
    Posts
    60
    Thanks Thanks Given 
    97
    Thanks Thanks Received 
    108
    Thanked in
    46 Posts
    Rep Power
    18

    Default

    بہت زبردست شاہ جی

    مگر ایسا لگا کہ اینڈ پہ آ کے سین واضح کرن۔ے کو دل نہیں کیا آپکا
    بس ڈالا فارغ ہوئے اور بس

    یہ کافی شارٹ کٹ سا ہو گیا

  12. The Following 3 Users Say Thank You to mmmali61 For This Useful Post:

    farhan403 (05-01-2019), hot_irfan (08-01-2019), shahg (06-01-2019)

  13. #357
    Join Date
    Oct 2018
    Location
    In husband ہارٹ.
    Posts
    80
    Thanks Thanks Given 
    415
    Thanks Thanks Received 
    156
    Thanked in
    74 Posts
    Rep Power
    10

    Default

    Shah G....


    ZABBARDAST ZABBARDAST ZABBARDAST ZABBARDAST ZABBARDAST ZABBARDAST ZABBARDAST ZABBARDAST

    Morning main uodate parh kr maza a gaya...

    Very hot and sexy update...

    Keep it up...
    سیکسی لیڈی

  14. The Following 4 Users Say Thank You to MamonaKhan For This Useful Post:

    hot-boy (06-01-2019), hot_irfan (08-01-2019), shahg (06-01-2019), windstorm (05-01-2019)

  15. #358
    Join Date
    Dec 2010
    Posts
    637
    Thanks Thanks Given 
    47
    Thanks Thanks Received 
    519
    Thanked in
    268 Posts
    Rep Power
    73

    Default

    awesome update shah g

    maza aa gya

  16. The Following 3 Users Say Thank You to Story Maker For This Useful Post:

    hot-boy (06-01-2019), hot_irfan (08-01-2019), shahg (06-01-2019)

  17. #359
    Join Date
    Dec 2018
    Location
    In Your Heart
    Posts
    12
    Thanks Thanks Given 
    100
    Thanks Thanks Received 
    31
    Thanked in
    10 Posts
    Rep Power
    3

    Default

    Sab se pehly to apni tabiat ka btay ! Kesi ha ab, wesy update parh k andaza ho gya k A one ho gi phr b tsali zrori ha na.
    And
    U . . . . . P . . . . D . . . A . . T. . . E.
    Hamesha ki traha, top pe, lajawab story Bakamal manzar kshi.
    . Very good+intresting+hot +everything jo k need hoti story ki.

    Thanx for good update.
    Last pe dua, hmesha kush rahy aur hmy rakhny ki koshish kren, jo k ap rakh rahy hain.
    .

  18. The Following 3 Users Say Thank You to Fathr Of Fun For This Useful Post:

    hot-boy (06-01-2019), hot_irfan (08-01-2019), shahg (06-01-2019)

  19. #360
    Join Date
    Aug 2008
    Location
    Islamabad
    Posts
    120
    Thanks Thanks Given 
    357
    Thanks Thanks Received 
    65
    Thanked in
    34 Posts
    Rep Power
    34

    Default

    Waaaah kia naqsha khencha hai sex ka akhir main. Do larkiyaan kutti ban kar phuddi aur gaand hazir kye hue hain. Shahg kabhi aik ke andar lora thokta hai aur kabhi doosri ke andar. Zabardast scene hai. Very hot updates.

  20. The Following 3 Users Say Thank You to Lovelymale For This Useful Post:

    hot-boy (06-01-2019), hot_irfan (08-01-2019), shahg (06-01-2019)

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •